اردو
Sunday 25th of June 2017
code: 82422
تا روں بھري رات

تاروں  بھري  رات سو  رہي  ہے

نوراني   سمے   بکھر  رہے  ہيں

خوشبو ہے بسي ہوئي ہوا ميں

شاخوں کو ہوا  جگا  رہي   ہے

کرنيں  برسا  رہے  ہيں  تارے

پھولوں  پہ  بہار  آ رہي    ہے

ہر سمت مہک رہي ہيں کلياں

پھيلا  ہوا  نور  کا  سماں   ہے

جنت  کي  ہوائيں آرہي ہيں

پودے جو ہوا سے ہل رہے ہيں

منہ پھولوں کا اوس دھونے آئي

دنيا  خاموش  ہو  رہي   ہے

دھند لے سائے  ابھر رہے  ہيں

اور نور گھلا ہوا فضا ميں

جو چھاؤ ں ہے تھرتھرا رہي ہے

چاندي سي بہا رہے ہيں تارے

اور  چاند ني  لہلہا  رہي  ہے

خوابوںميں بہک رہي ہيں کلياں

نکھرا  ہوا  نيلا  آسماں  ہے

خوابوں کے ترانے گا رہي ہيں

ہر شا خ ميں پھول کھل رہے ہيں

اختر  چلو  صبح  ہونے  آئي


source : tebyan
user comment
 

latest article

  مشخصات امام زین العابدین علیہ السلام
  امام حسین علیہ السلام
  اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کی کاوشوں سے پرتگال کا اسلامی مرکز ...
  شوہر، بيوي کي ضرورتوں کو درک کرے
  بڑي بات ہے
  خدا کي تعريف
  بہار آئي
  رات
  تا روں بھري رات
  ملت اسلامیہ کے نوجوانوں کے لیے لمحہ فکر و عمل