اردو
Friday 18th of August 2017
code: 83972
امریکی لڑاکا طیاروں کے فضائی حملوں میں الحشد الشعبی کے 40 جوان شہید

امریکی جنگی طیاروں کے ذریعے عراق و شام کے سرحدی علاقوں پر کئے گئے فضائی حملوں میں الحشد الشعبی کے چالیس جوان شہید ہو گئے ہیں۔
عراق کی رضاکار فورس الحشد الشعبی نے اپنا ایک بیان جاری کر کے خبر دی ہے کہ سید الشہداء بٹالین پر امریکی لڑاکا طیاروں نے بمباری کر کے چالیس جوانوں کو شہید کر دیا ہے۔
عراق کی الحشد الشعبی فورس نے اس بات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہ امریکہ کی اس جارحیت کا اسے بھر پور جواب جلد مل جائے گا کہا: ہم حکومت عراق سے مطالبہ کرتے ہیں کہ سید الشہداء بٹالین پر کئے گئے امریکی حملے کے بارے میں تحقیقات کرائے۔
سید الشہدا بٹالین کے کمانڈر کا کہنا ہے کہ امریکی جنگی طیاروں نے پیر کے روز علی الصبح شامی سرحد پر تعیینات الحشد الشعبی کے ٹھکانوں پر وحشیانہ حملہ کرکے متعدد جوانوں کو شہید یا زخمی کردیا۔
امریکی حکام نے دعوی کیا ہے کہ جنگی طیاروں نے داعشی دہشت گردوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ہے تاہم الحشد الشعبی سے وابستہ سید الشہدا بٹالین کے  کمانڈر کا کہنا ہے امریکہ جان بوجھ کر الحشد الشعبی کو نشانہ بنا رہا ہے۔
امریکہ نے الحشد الشعبی کے ٹھکانوں پر سمارٹ بموں کا استعمال کیا ہے جس کے نتیجے میں کافی جانی اور مالی نقصان ہوا ہے۔
سید الشہدا بٹالین کے کمانڈر نے امریکی حکام کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ الحشد الشعبی کے جوان امریکی جارحیت کا بھر پور جواب دیں گے۔
سید شہدا بٹالین کے کمانڈر نے مزید کہا ہم شام سے ملحقہ سرحدوں سے تمام داعشی دہشت گردوں کا خاتمہ کرکے دم لیں گے۔
واضح رہے کہ اس سے پہلے بھی امریکی جنگی طیاروں نے مختلف مقامات خاص کر موصل میں عراقی فورسز پر حملے کئے ہیں۔

user comment
 

latest article

  نائیجیریا؛ خود کش حملے میں 27 افراد ہلاک
  سعودی عرب، العوامیہ کے شیعہ نشین علاقے المسورہ کو مکمل طور ...
  سعودی عرب، العوامیہ کے شیعہ نشین علاقے المسورہ کو مکمل طور ...
  تفتان سرحد پر زائرین کو سکیورٹی کے نام پر پریشان کئے جانے کے ...
  سپاہ پاسداران انقلاب براہ راست شام میں داعش کے خلاف میدان ...
  افغانستان کے علاقے میرزا ولنگ میں شیعوں کی اجتماعی قبروں کا ...
  آل خلیفہ حکومت کے کارندوں کے ذریعے سیاسی کارکنوں کی ...
  مغربی افریقہ: بورکینافاسو میں ریسٹورینٹ پر دھشتگردانہ ...
  ریاست کے محفوظ مستقبل کیلئے تمام سیاسی قوتیں متحد ہوجائیں: ...
  آئندہ پانچ سال کے لئے رہبر انقلاب نے مجمع تشخیص مصلحت نظام ...