اردو
Tuesday 21st of November 2017
code: 83648
نائیجیرین فورس کا پرامن مظاہرین پر تشدد، اسلامی تحریک کا مذمتی بیان

نائیجیریا کی اسلامی تحریک نے پرامن مظاہرین پر سیکورٹی فورس کے تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے آیت اللہ ابراہیم زکزکی کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔

اسلامی تحریک کے جاری کردہ بیان کے مطابق آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی کی رہائی کے لیے دارالحکومت ابوجا میں پرامن مظاہرہ کرنے والوں پر پولیس کا تشدد قابل مذمت ہے۔نائیجریا کی پولیس نے اسلامی تحریک کے بانی آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی کی رہائی کا مطالبہ کرنے والے پرامن مظاہرین کو سرکوب کرنے کے لیے آنسوگیس کے گولوں اور پانی کی توپوں کا استعمال کیا ہے جس کے نتیجے میں متعدد مظاہرین زخمی ہوئے ہیں۔نائیجیریا کی فوج نے جس پر سعودی عرب کا اثر و رسوخ ہے ملک کے سرکردہ سیاسی اور مذہبی رہنما اور اسلامی تحریک کے سربراہ آیت اللہ ابراہیم زکزکی کو دسمبر دوہزار پندرہ سے گرفتار کر رکھا ہے اور عدالتی احکامات کے باوجود انہیں رہا کرنے سے گریز کر رہی ہے۔نائیجیریا کی فوج نے دسمبر دوہزار پندرہ میں چہلم امام حسین علیہ السلام کے موقع پر عزاداروں کے اجتماع پر حملہ کرکے سیکڑوں عزاداروں کو شہید کردیا تھا۔ایمنسٹی انٹرنیشنل سمیت متعدد عالمی اداروں نے نائیجیریا کی فوج کو کادونا صوبے میں شیعہ مسلمانوں کے قتل عام کا ذمہ دار قرار دیا ہے۔

user comment
 

latest article

  چینی شیعہ زائرین کربلا کی پذیرائی کرنے میں مصروف
  اربعین حسینی کے موقع پر امریکی خاتون نے شیعہ مذہب قبول کر لیا
  نجف اشرف اور کربلائے معلی میں ایام اربعین کے دوران اردو زبان ...
  ایمریٹس ائیر لائن نے پاکستانی زائرین کو لے جانے سے انکار کر ...
  شامی فوج نے دیر الزور کو داعش سے آزاد کرا لیا
  بیروت میں دوسری بین الاقوامی فلسطین کانفرنس کی اختتامی ...
  نائیجیریا؛ مسجد میں خودکش دھماکے کے نتیجے میں پانچ نمازی ...
  غزہ پر اسرئیل کی جانب سے زہریلی گیس کے استعمال کا انکشاف
  پاکستان میں شہباز شریف کو وزیر اعظم نامزد کرنے کا فیصلہ
  صہیونی حکومت کے خلاف جنگ جاری پر رہبر انقلاب اسلامی کی تاکید