اردو
Tuesday 26th of September 2017
code: 83648
نائیجیرین فورس کا پرامن مظاہرین پر تشدد، اسلامی تحریک کا مذمتی بیان

نائیجیریا کی اسلامی تحریک نے پرامن مظاہرین پر سیکورٹی فورس کے تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے آیت اللہ ابراہیم زکزکی کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔

اسلامی تحریک کے جاری کردہ بیان کے مطابق آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی کی رہائی کے لیے دارالحکومت ابوجا میں پرامن مظاہرہ کرنے والوں پر پولیس کا تشدد قابل مذمت ہے۔نائیجریا کی پولیس نے اسلامی تحریک کے بانی آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزکی کی رہائی کا مطالبہ کرنے والے پرامن مظاہرین کو سرکوب کرنے کے لیے آنسوگیس کے گولوں اور پانی کی توپوں کا استعمال کیا ہے جس کے نتیجے میں متعدد مظاہرین زخمی ہوئے ہیں۔نائیجیریا کی فوج نے جس پر سعودی عرب کا اثر و رسوخ ہے ملک کے سرکردہ سیاسی اور مذہبی رہنما اور اسلامی تحریک کے سربراہ آیت اللہ ابراہیم زکزکی کو دسمبر دوہزار پندرہ سے گرفتار کر رکھا ہے اور عدالتی احکامات کے باوجود انہیں رہا کرنے سے گریز کر رہی ہے۔نائیجیریا کی فوج نے دسمبر دوہزار پندرہ میں چہلم امام حسین علیہ السلام کے موقع پر عزاداروں کے اجتماع پر حملہ کرکے سیکڑوں عزاداروں کو شہید کردیا تھا۔ایمنسٹی انٹرنیشنل سمیت متعدد عالمی اداروں نے نائیجیریا کی فوج کو کادونا صوبے میں شیعہ مسلمانوں کے قتل عام کا ذمہ دار قرار دیا ہے۔

user comment
 

latest article

  عراق کی مزاحمتی جماعتیں امام خامنہ ای کے زیر قیادت کام کررہی ...
  صحرائے سینا میں مصر کے 2 فوجی ہلاک
  نجف اشرف میں ’’بین الاقوامی غدیر میڈیا فیسٹیول‘‘ کے ...
  روہنگیا کے مسلمان مہاجرین ہندوستان کے قومی سلامتی کے لئے ...
  برما مسلمانوں پر جاری بربریت کے مقابلے میں اقوام عالم کی ...
  شہدائے مدافع حرم کے ’’بے سر کمانڈروں‘‘ کی یاد میں تقریب کا ...
  بحران شام کے آغاز پر رہبر انقلاب سے ملاقات کا حال از زبان سید ...
  میانمار میں تشدد اسلام اور بدھ مت کی لڑائی نہیں سیاسی جنگ ہے: ...
  بنگلا دیش نے سرحد پر باردوی سرنگیں بچھانے پر احتجاجاً ...
  داعشیوں پر مہلک اور کاری ضرب / شامی فورسز نے دیرالزورشہر کا ...